Pak4all

    { Sitaara }

    Share
    avatar
    faran4all
    Administrator
    Administrator

    Number of posts : 1415
    Registration date : 2008-07-29

    all { Sitaara }

    Post  faran4all on Mon Aug 04, 2008 2:17 pm

    میں ستارہ ہوں جل کر بھی روشن رہوں گی
    خود کو دے دلاسے بہلاتی رہوں میں



    افراد کے ہاتھوں میں ہے اقوام کی تقدیر
    پر فرد ہے ملت کے مقدر کا ستارہ



    کبھی ستارہ کبھی ہمسفر نہیں ملا
    ہمارے دل کی زمین کو قمر نہیں ملا


    وہ ہجر کی رات کا ستارہ، وہ ہم نفس، وہ ہم سخن ہمارا
    صدا رہے جس کا نام پیارا، سنا ہے کل رات مر گیا وہ


    اپنی مرضی کا ستارہ ہے مقدر میرا
    میرے ہاتھوں کا سنوارا ہے مقدر میرا
    غم ہی دیتا ہے مجھ کو پھر بھی مجھ کو عزیز ہے
    کچھ تو دیتا ہے خدایا مقدر میرا


    یہ گلاب بھی مییرا عکس ہے یہ ستارہ بھی میرا نقش ہے
    میں کبھی زمیں میں دفن ہوں کبھی آسماں سے گزر گیا
    میں*اداس چاند کا باغ ہوں نئے موسم کا سراغ ہوں
    میری شاخ شاخ ہری رہی میرا پھول پھول بکھر گیا

    __________________

      Current date/time is Fri Sep 21, 2018 9:54 pm